29

لاہور لائنز کےعدنان رسول کا بولنگ ایکشن مشکوک

تصویر کے کاپی رائٹ
TheNewsTribe

Image caption

لاہور لائنز پاکستان کی ٹی20 چیمپیئن ٹیم ہے

بھارت میں چیمپئنز لیگ ٹی ٹوئنٹی کھیلنے والی پاکستان کی ٹیم لاہور لائنز کے آف سپنر عدنان رسول کے بولنگ ایکشن کے بارے میں امپائرز نے رپورٹ کر دی ہے کہ وہ قوانین کے مطابق نہیں ہے۔

عدنان رسول امپائرز کی اس رپورٹ کے باوجود کھیل سکتے ہیں تاہم اگر دوبارہ وہ رپورٹ ہوگئے تو پھر انھیں معطلی کا سامنا کرنا پڑے گا۔

عدنان رسول کے بولنگ ایکشن کے بارے میں رپورٹ لاہور لائنز اور کولکتہ نائٹ رائیڈرز کے درمیان کھیلے گئے میچ کے فیلڈ امپائرز کمار دھرماسینا اور شمس الدین اور تھرڈ امپائر انیل چوہدری نے کی۔

مشکوک بولنگ ایکشن، سعید اجمل پر پابندی

مشکوک بولنگ ایکشن سے متعلق چیمپئنز لیگ کی پالیسی کے مطابق عدنان رسول کو وارننگ لسٹ میں رکھا گیا ہے اور وہ کھیل سکتے ہیں لیکن اگر ان کے بولنگ ایکشن کے مشکوک ہونے کے بارے میں امپائرز نے دوبارہ رپورٹ کر دی تو وہ اس ٹورنامنٹ اور بی سی سی آئی کے تحت ہونے والے کسی بھی میچ میں بولنگ نہیں کر سکیں گے۔

عدنان رسول اگر چاہیں تو بی سی سی آئی کی مشکوک بولنگ ایکشن سے متعلق کمیٹی سے مدد کی درخواست کر سکتے ہیں۔

چیمپئنز لیگ کے چار میچوں میں عدنان رسول نے چار وکٹیں حاصل کی ہیں۔

لاہور لائنز کی ٹیم منیجمنٹ کا کہنا ہے کہ عدنان رسول کو فی الحال وارننگ لسٹ پر رکھا گیا ہے لہٰذا انھیں فوری طور پر وطن واپس بھیجنے کا کوئی ارادہ نہیں ہے۔

33 سالہ عدنان رسول پاکستان کی فرسٹ کلاس کرکٹ میں نیشنل بینک کی طرف سے کھیلتے ہیں۔

وہ حالیہ دنوں میں مشکوک بولنگ ایکشن کی زد میں آنے والے دوسرے پاکستانی بولر ہیں۔ ان سے قبل سعید اجمل کو بین الاقوامی کرکٹ میں معطلی کا سامنا ہے اور پاکستان کرکٹ بورڈ ان کے بولنگ ایکشن کی درستگی پر کام کر رہا ہے جس کے لیے ماضی کے مشہور آف سپنر ثقلین مشتاق کی خدمات بھی حاصل کی گئی ہیں۔



Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

Leave a Reply