28

سعید اجمل کا کریئر، گال سے گال تک

تصویر کے کاپی رائٹ
AFP

Image caption

اجمل 30 سال کی عمر میں بین الاقوامی کرکٹ میں آئے

پاکستان کرکٹ ٹیم کے بین الاقوامی شہرت یافتہ بولر سعید اجمل کے بولنگ ایکشن کو انٹرنیشنل کرکٹ کونسل نے غیر قانونی قرار دے دیا گیا ہے۔

سعید اجمل سنہ 1977 میں فیصل آباد میں پیدا ہوئے تھے۔ انھوں نے بین الاقوامی کرکٹ میں اپنا پہلا میچ دو جولائی سنہ 2008 میں بھارت کے خلاف کراچی میں کھیلا، جب کہ پہلا ٹیسٹ میچ سری لنکا کے شہر گال میں سنہ 2009 میں سری لنکا کے خلاف کھیلا۔

سعید اجمل پاکستان کی طرف سے اب تک 35 ٹیسٹ کھیل چکے ہیں اور انھوں نے 28 اوسط رنز فی وکٹ کی اوسط سے 178 کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا ہے۔

وہ 111 ایک روزہ بین الاقوامی میچوں میں پاکستان کی نمائندگی کر چکے ہیں اور 22 رنز فی وکٹ کی اوسط سے انھوں نے 183 کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا ہے۔ سعید اجمل 63 ٹی ٹوئنٹی انٹرنیشل میچ کھیل چکے ہیں اور انھوں نے ان میچوں میں 85 کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔

سعید اجمل 30 سال کی عمر میں بین الاقوامی کرکٹ میں شامل ہوئے اور اپنے پہلے ہی ٹیسٹ میں انھوں نے پانچ کھلاڑیوں کو آؤٹ کر کے اپنی آمد کا اعلان کیا۔

سعید اجمل سپن بولنگ میں اپنی مہارت کی وجہ سے مشہور ہوئے اور خاص طور پر ’دوسرا‘ گیند پھینکے میں ان کا کوئی ثانی نہیں ہے۔

ویسٹ انڈیز کے خلاف سنہ میں پراویڈنس ٹیسٹ میں انھوں نے 111 رنز دے کر 11 کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا تھا۔ یہ ٹیسٹ کرکٹ میں ان کی سب سے اچھی کارکردگی ہے۔

سعید اجمل کے بولنگ کے انداز پر سنہ 2009 میں بھی اعتراض ہوا تھا لیکن آئی سی سی نے ان اعتراضات کو رد کرتے ہوئے انھوں کلیئر کر دیا تھا۔

سعید اجمل نے گال سے اپنے ٹیسٹ کریئر کا آغاز کیا تھا، گذشتہ ماہ وہیں ان کے بولنگ ایکشن پر اعتراض اٹھایا گیا تھا اور اب آئی سی سی نے تفصیلی معائنہ کرنے کے بعد ان کے بولنگ ایکشن کو مشکوک قرار دیتے ہوئے ان پر پابندی لگا دی ہے۔



Source link

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

Leave a Reply